Home / عمومی / قاتلوں کے مداحو سنو

قاتلوں کے مداحو سنو

Suno

قاتلوں کے مداحو سنو

رہزنوں کے رہنماو سنو

تبلیغ تشدد کی کر کے تم

نقشِ ابلیس پے چلے ہو

ترویج نفرت کی کر کے تم

معیارِ انساں سے گر گئے ہو

تشدد سے کوئی سدھار آتا نہیں

نفرت انسانوں کو دور کرتی ہے

قتل سے کوئی سوچ مرتی نہیں

یہ رسم عبث رنجور کرتی ہے

ایک انساں کا شیوہ نہں وہ

عقیدے کی آڑ میں قاتل بنے

بحر کی ہر موج کو زخمی کرنے

ایک جاہل وحشی ساحل بنے

معیارِ انساں تو یہ ہے کہ تم

قاتلوں کی مداحی نہ کرو

سوزِ انسانیت کے واسطے

رہزنوں کی رہنمائی نہ کرو

عمران خوشحال

Check Also

نہ چاہو مجھے جاں سے زیادہ تم

نہ چاہو مجھے جاں سے زیادہ تم پر کرو تو ساتھ چلنے کا ارادہ تم …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے